آذربائیجان اور آرمینیا کے درمیان ریجن نگورنو کاراباغ میں دوبارہ جھڑپیں

آذربائیجان اور آرمینیا کے درمیان ریجن نگورنو کاراباغ میں دوبارہ جھڑپیں

By

باکو آذربائیجان اور آرمینیا کے درمیان جنگ بندی کے معاہدے کے بعد ایک بار پھر جھڑپوں کا سلسلہ شروع ہوگیا ہے۔دونوں ملکوں کے درمیاں ریجن نگورنو کاراباغ میں دوبارہ جھڑپیں ہوئی ہیں۔

ا  10 نومبر کو آذربائیجان کے ساتھ جنگ میں آرمینیا نے پسپائی اختیار کرتے ہوئے روس کی ثالثی میں مکمل جنگ بندی کے معاہدے پر دستخط کیے تھے۔جنگ بندی کے بعد یہ پہلا موقع ہے دونوں ممالک کی فوجیں آمنے سامنے آئی ہیں۔آذربائیجان کی وزارت دفاع کا کہنا ہے کہ نگورنوکاراباغ سے ملحقہ علاقوں میں آذری فوج کے یونٹوں پرحملہ کیاگیا جس کے نتیجے میں 4 آذری اہلکار جاں بحق ہوئے۔آرمینین حکام نے الزام عائد کیا ہے کہ آذری فوج نے جنگ بندی کی خلاف ورزی کی اور حملہ کیا جس میں 6 اہلکار زخمی ہوئے۔روس نے تازہ جھڑپ کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا ہے کہ دونوں جانب سے ایک دوسرے پر الزامات عائد کیے گئے ہیں لیکن ماسکو نے جنگ بندی کی خلاف ورزی کا ذمہ دار کسی کو نہیں ٹھہرایا۔

You may also like