”پہلی بار شہبازشریف کب پنجاب اسمبلی کے رکن بنے؟“نیب کے گواہ کے جواب پر کمرہ عدالت قہقہے لگ گئے

”پہلی بار شہبازشریف کب پنجاب اسمبلی کے رکن بنے؟“نیب کے گواہ کے جواب پر کمرہ عدالت قہقہے لگ گئے

By

لاہور احتساب عدالت میں شہبازشریف فیملی کیخلاف منی لانڈرنگ کیس کی سماعت کے دوران نیب کے گواہ کے جواب پر قہقہے لگ گئے،احتساب عدالت نے منی لانڈرنگ کیس میں استغاثہ کے گواہ فیصل بلال کی سوالوں کے جواب نہ دینے پر سرزنش کردی،جج جوادالحسن نے کہاکہ سوال کو سمجھو اور جواب دو ،پنجاب اسمبلی میں نہیں بیٹھے کہ لوگوں کو پاس جاری کررہے ہو ۔

نجی ٹی وی سما نیوز کے مطابق احتساب عدالت میں منی لانڈرنگ ریفرنس پر سماعت جاری ہے،احتساب عدالت کے ایڈمن جج جوادالحسن ریفرنس پر سماعت کررہے ہیں،عدالت میں شہبازشریف اور حمزہ شہباز نے پیش ہو کر حاضری مکمل کرائی ،فاضل جج نے حکم دیتے ہوئے کہاکہ ملزمان کے وکلا تینوں گواہوں پر جرح مکمل کریں ،احتساب عدالت میں نیب کے گواہ فیصل بلال نے بیان ریکارڈ کراتے ہوئے کہاکہ میری تعلیم ایم بی اے ہے اور2005 میں پنجاب اسمبلی میں تعینات ہوا،گواہ نے کہاکہ میں پنجاب اسمبلی کے مختلف عہدوں پر تعینات رہا،میں 2009 سے 2018 تک اسسٹنٹ سیکرٹری اکاﺅنٹس برانچ میں رہا،پنجاب اسمبلی کے بجٹ اکاﺅنٹس کی تین برانچز ہیں۔

You may also like