وفاقی وزیر ریلوے اعظم سواتی نے گھوٹکی ٹرین حادثے کی ذمہ داری قبول کرلی،بات کرتے ہوئے آبدیدہ

وفاقی وزیر ریلوے اعظم سواتی نے گھوٹکی ٹرین حادثے کی ذمہ داری قبول کرلی،بات کرتے ہوئے آبدیدہ

By

رحیم یار خان: وفاقی وزیرریلوے اعظم خان سواتی نے گھوٹکی ٹرین حادثے کی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے کہا ہے کہ سنگل سسٹم کی ناکامی اور بروقت اقدامات کے باعث حادثہ ہوا،یہ لاپرواہی ہے یا حادثہ ہم اس کے ذمہ دار ہیں۔اعظم سواتی ٹرین حادثے میں جاں بحق ہونے والے بچوں اور بچیوں کے متعلق بات کرتے ہوئے آبدیدہ بھی ہوگئے۔

نجی ٹی وی 92نیوز کے مطابق وفاقی وزیرا عظم سواتی کا کہنا تھا کہ ریلوے میں بیٹھے کرپٹ افسران کے خلاف جہاد کا اعلان کردیا ہے میں قسم کھاتا ہوں کہ کرپشن کے خلاف جاری جہاد کو منتطقی انجام تک پہنچاﺅں گا۔

اعظم سواتی نے کہا کہ معصوم بچوں کی لاشیں دیکھ کر اپنے پوتے اور پوتیاں یاد آگئیں ہیں، کل تک رپورٹ مرتب ہوجائے گی اور ذمہ داروں کے خلاف تعین ہوگا، ریلوے حکام کی غفلت کے باعث حادثے پر حادثے ہورہے ہیںان حادثات میں انسانی جانوں سے کھیلنے والوں کو نشان عبرت بنائیں گے۔

وفاقی وزیر نے کہاکہ وزیرا عظم عمران خان کو حقائق سے آگاہ کردیا ہے، سکھر ڈویژن کا ریلوے ٹریک بوسیدہ ہو چکا ہے،سرسید ایکسپریس کے ڈرائیور نے ایمرجنسی بریک کا استعما ل کیا مگر تب تک دیر ہو چکی تھی۔

انہوں نے مزید کہاکہ سنگل سسٹم پر 20ارب روپے خرچ ہوچکے ہیں مگر ابھی تک ٹھیک طرح سے فعال نہیں ہوا ہے،اب تک ٹرینوں کو جھنڈی کے ذریعے چلا رہے ہیں۔

You may also like

%d bloggers like this: