لاہور ہائیکورٹ ،شہباز شریف کی ضمانت کا تفصیلی تحریری فیصلہ جاری 1

لاہور ہائیکورٹ ،شہباز شریف کی ضمانت کا تفصیلی تحریری فیصلہ جاری

By

لاہور: ہائیکورٹ کی جانب سے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر اور قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کی ضمانت کا تفصیلی تحریری فیصلہ جاری کردیاگیا۔

نجی ٹی وی ہم نیوز کے مطابق لاہور ہائی کورٹ کی جانب سے جاری ہونے والے تحریری فیصلے میں کہا گیا ہے کہ شہباز شریف کی درخواست ضمانت میں تاخیر اور بیماری کی بنیاد نہیں بنتی، بے نامی ثابت کرنے کے لیے شخص کا خاندان کے افراد پر مالی لحاظ سے منحصر ہونا ضروری ہے۔ اثاثے نہ تو شہباز شریف کے نام پر ہیں اور نہ انکے نام پر ایف ٹی ٹیز آئیں، نیب کے مطابق شہباز شریف ماڈل ٹاو¿ن رہائشگاہ کے مالک اور قابض ہیں جبکہ گھر نصرت شہباز کے نام پرہے۔

لاہور ہائی کورٹ کے فیصلے کے مطابقشہباز شریف کے اکاونٹس میں پیسوں کے آنے کا عنصر موجود نہیں، ہماری جمہوریت کی یہ بنیاد ہے کہ جب کسی سیاسی شخصیت پر کرپشن کے الزام لگیں تو وہ سیاسی نقصان برداشت کرنے کا بھی پابند ہو۔عدالت اپنی حدود میں رہتے ہوئے قانون کے مطابق کیسز تک محدود ہے، موجودہ وقت میں ہم اخلاقیات سے رہنمائی اور مدد لیتے ہیں،جب کسی فرد کی آزادی کا معاملہ آئے تو ہم پھر بنیادی اصولوں کے تحت ضمانت دینے یا خارج کرنے کے پابند ہیں۔

 تفصیلی فیصلے میں مزید کہا گیا کہ کسی کے خلاف الزام کو ثابت کرنا استغاثہ کا کام ہے، نیب نے تسلیم کیا ہے کہ اپنے خاندان کے نام پراثاثے بنوانے کے لیے شہباز شریف پر کسی سے کک بیکس لینے کا الزام نہیں ہے۔

You may also like

%d bloggers like this: