وزیراعظم نے نوجوانوں کو جو کتاب پڑھنے کا مشورہ دیا کیا وہ فرقہ واریت کا باعث بن سکتی ہے ؟ اس میں کیا ہے ؟ انتہائی حیران کن تفصیلات سامنے آ گئیں

وزیراعظم نے نوجوانوں کو جو کتاب پڑھنے کا مشورہ دیا کیا وہ فرقہ واریت کا باعث بن سکتی ہے ؟ اس میں کیا ہے ؟ انتہائی حیران کن تفصیلات سامنے آ گئیں

By

لاہورکورونا وائرس کے باعث ملک میں تقریبا پونے دو ماہ تک لاک ڈاﺅن کی صورتحال رہی تاہم اب چھوٹے کاروبار کو کھولنے کی اجازت دی گئی ہے ، لاک ڈاﺅن کے دوران عوام کے پاس فراغت کا وقت وسیع تھا جس کے باعث وزیراعظم عمران خان نے اس دوران ترک ڈرامہ ارتغرل دیکھنے کا مشورہ دیا جبکہ انہوں نے پی ٹی وی کو اسے اردو میں چلانے کی ہدایت بھی کی ۔

ترک ڈرامہ اس وقت جوش و خروش کے ساتھ اردو زبان میں جاری ہے جس کو یکم رمضان سے نشر کیا جانا شروع کیا گیا ، عوام اس میں بے حد دلچسپی لے رہی ہے جبکہ یہ سوشل میڈیا پر بھی وائرل ہو چکا ہے ۔

اس کے بعد وزیراعظم عمران خان نے نوجوانوں کو فارغ وقت میں کتا ب ” لوسٹ اسلامک ہسٹری “ جو کہ 2014 میں شائع ہوئی ، پڑھنے کی تجویز دی ، اس کتاب کو امریکی محقق فراس الخطیب نے تحریر کیاہے ۔عمران خان کی ٹویٹ کے بعد کافی بڑی تعداد میں ان کے فالوورز نے کہا کہ وہ یہ کتاب پڑھنے میں دلچسپی رکھتے ہیں۔

وزیراعظم عمران خان کی جانب سے تجویز کیے جانے کے بعد بی بی سی کی جانب سے اس کتاب کا مطالعہ کیا گیا اور اس کے بعد کتاب پر آرٹیکل شائع کیا گیاہے جس میں اس کتاب کے متن کو اجاگر کیا گیاہے ۔بی بی سی کی جانب سے فراہم کی جانے والی تفصیلات کے مطابق اس کتاب میں اسلام کے آغاز، اس کے سنہرے دور، مختلف ریاستوں اور حکمرانوں کے عروج و زوال کا حال بیان ہے اور ساتھ ساتھ معروف اسلامک سکالرز اور محققین جیسے ابن خلدون اور ابن سینا کا بھی ذکر ہے۔اس کتاب کو سلیس زبان میں تحریر کیا گیا ہے اور اس میں جگہ جگہ پر حاشیوں میں چند تاریخی واقعات کے بارے میں معلومات بھی فراہم کی گئی ہیں جو کہ کتاب کے مرکزی بیانیے سے ہٹ کر ہیں۔

Leave a Comment

Your email address will not be published.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.

You may also like

Hot News